Zainab aur Belagam Media By Jameel Farooqi 94

زینب اور بے لگام میڈیا

تحریر: جمیل فاروقی

کسی کی بہن , کسی کی بیٹی , کسی کی گڑیا … کوئی زینب نہ بنے . کوئی درندگی کی بھینٹ نہ چڑھے .. ہماری خدا سے یہی دعا اور التجا رہتی ہے لیکن اس وقت ہماری سوچ نہ جانے کس کالے کنویں کی گہری کھائی میں جا مرتی ہے جب ہم اپنے ہاتھوں سے اپنے بیٹیوں کو ہوس پرست کتوں اور بےراہ روی کے چنگل میں پھنسے جنگلی جانوروں کے آگے جھونک دیتے ہیں .. مانا ہم لبرل , آزاد اور ماڈرن مزاج کے ہیں .. مانا شادیانوں پہ بچیاں خوشی سے جھوم بھی جایا کرتی ہیں لیکن ان ننھی کلیوں کے ہوشربا گانوں پر بیہودہ رقص کو نیشنل میڈیا پر براڈکاسٹ کرنا ہمارے یعنی تیسری دنیا کے معاشرے کے علاوہ اور کہاں ہوتا ہے .. صبح کا وقت بچیوں اور ماوں کی کردار سازی کا ہوتا ہے لیکن ہمارے ہاں اس میڈیم کو بگاڑ کے لئے استعمال کیا جاتا ہے .. چلئے آپ کی منطقی یا غیر منطقی سوچ کو دیکھتے ہوئے یہ بھی مان لیتے ہیں کہ یہ ماڈرن پاکستان کی جانب ایک قدم ہے لیکن میرا مارننگ شوز کے پروڈیوسرز سے لے کر میزبانوں تک سے ادنی سا سوال ہے کہ مانا کہ آپ کے بیہودہ قدموں کی چاپ سے ایک عام آدمی نہیں بہکے گا لیکن قصور یا شیخوپورہ میں بیٹھے اس زلیل کتے نما بھیڑیئے کے وحشی قدموں کو آپ کیسے روکو گے جو کمسن بچیوں کے ہیجان انگیز رقص کو دیکھتا ہے تو اور غرا اٹھتا ہے .. او یہ تمہارا کلچر نہیں ہے ..

اس کلچر کو پروموٹ کرتے ہو اور نتائج میں جنت جیسا ملک مانگتے ہو .. تم کیسے انسان ہو جو کتوں کے سامنے اپنی نسلوں کو پھینکتے ہو اور توقع رکھتے ہو کہ وہ انہیں نوچیں بھی نہ .. یہ مطالبہ درست ہے کہ زینب کے قاتلوں کو سرعام لٹکایا جائے .. لیکن گھروں میں لگی ریپسٹ rapists پیدا کرنے کی مشینوں کی طرف ہمارا دھیان کب جائے گا .. کب ہمیں اخلاقی , غیر اخلاقی اور فحاشی کے درمیان تمیز کرنا آئے گا .. ساحر لودھی اور ان جیسے دیگر لوگ قابل ہیں تو اپنی قابلیت کو آگے لائیں .. اس طرح کے کنٹینٹ سے مزید Rapists کو جنم دیے کر وہ کس طرح کا معاشرہ پروان چڑھانا چاہتے ہیں .. میڈیا کہنے کو کسی کے لئے رحمت کی بارش ہے لیکن اس کا دوسرا پہلو اس آگ کی طرح ہے جو دیکھتے ہی دیکھتے پورے کے پورے معاشرے کو اپنی لپیٹ میں لے لیتی ہے .. نیشنل ٹی وی پر بیہودگی کو جنگل کی آگ ہی سمجھیئے اور اس سے پہلے کہ وقت گزر جائے .. ایسے مارننگ شوز اور ہیجان انگیز contentکا بائیکاٹ کیجئے ۔۔(جمیل فاروقی)

(جمیل فاروقی معروف اینکر  اور کالم نگار ہیں، سما،سی این بی سی، ڈان نیوز، ایکسپریس، آج  کے بعد اب ان دنوں نیونیوز سے وابستہ ہیں، شہرت یافتہ پروگرام حرف راز کے میزبان بھی ہیں ، پہلی بار ہماری ویب سائیٹ کےلئے کچھ لکھا ہے، جس کے لئے ان کے ممنون ہیں اور امید کرتے ہیں کہ وہ اپنی نوازشات کا سلسلہ آئندہ بھی جاری رکھیں گے۔۔علی عمران جونیئر)

Facebook Comments

اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں